ویڑیو

ای پیپر

اہم خبریں

سرینگر /22مئی / این این این
انتظامیہ کی جانب سے رہبر جنگلات، رہبر زراعت،.

سرینگر /22مئی / این این این بارشوں کے بعد جموں کشمیر کے کئی علاقوں میں شبانہ.

کیمپ میں سینکڑوں مریضوں کا طبی معائنہ کیا گیا اور مفت ادویات بھی تقسیم کی.

مقامی مُصنفین کے مسائل اور محکمہ لائبریری

   45 Views   |      |   Sunday, May, 22, 2022

جی آر بیگ میموریل ٹرسٹ کی اہم میٹنگ منعقد

اگر یہ کہا جائے کہ وادئ کشمیر مسائل کا منبع ہے تو بے جانہ ہوگا _ کچھ مسائل تو یہاں خود بخود پیدا ہوتے ہیں اور کچھ ہم لوگ جان بوجھ کر پیدا کرتے ہیں _شاید عوام کے لئے ایسے مسائل اور مشکلات پیدا کر کے یہاں کے آفسران کو خوشی ہوتی ہے _روٹی روزی کے مسائل تو یہاں ہر دور میں رہے وہ چاہے عوامی دورِ حکومت ہو یا گورنر راج ،آج ہم انتظامیہ کی توجہ جس مسئلے کی جانب مرکوز کروانا چاہتے ہیں وہ ہیں ہمارے یہاں کے قلمکاروں کے ،چونکہ شعراء اور ادباء ہمارے سماج کے وہ جُز و لاینفک ہیں جو اکثر و بیشتر اس معاشرے کی عکاسی اپنی تحریروں میں کر کے ہمیں سماجی مسائل سے بروقت آگاہ کرتے ہیں بلکہ سماج اور معاشرے میں پھیلی ہوئی بدعات اور بُرائیوں کو اجاگر کر کے ہمیں کچوے لگاکر ہوشیار کرتے ہیں ،حکومت نے بھی ان کی پزیرائی اور حوصلہ افزائی کے لئے باضابطہ کچھ محکمے بنائیں ہیں جس میں ان کے لئے اسکیمیں رکھی گئی ہیں ایسا ہی ایک محکمہ ہے لائبریری اینڈ ریسرچ جو ہر سال مقامی مُصنفین کی شائع شُدہ کتب خرید کر ریاست کی تمام لائبریریوں تک پہنچاتا ہے،اس کے لئے باضابطہ یو ٹی لیول کی ایک کمیٹی تشکیل دی جاتی ہے جو کُتب کا انتخاب کرکے محکمہ کو سونپ دیتی ہے اسی سلسلے میں امسال بھی 22-23 اگست کو اس کمیٹیکی میٹنگ منعقد ہوئی جس میں کمیٹی ممبران نے اپنے فرائض نبھاتے ہوئے محکمہ کو مُنتخب شُدہ کُتب کی ایک فہرست فراہم کی جس کے بعد ڈائریکٹر صاحب کو مقامی مصنفین کو سپلائی آرڈر اجرا کرنے تھےجب تین ماہ بعد بھی آڈر اجراء نہیں کئے گئے تو مُصنفین میں تشویش ہونا لازمی تھا، اس دوران معلوم پڑا کہ عرصہ تین ماہ گُزرنے کے بعد بھی جموں سے آئے ہوئے کمیٹی ممبران کو جہاز ٹکٹ کی رقم بھی ادا نہیں کی گئی ،سپلائی آرڈر اجرا کرنا تو دور کی بات ،کئی بار مقامی مُصنفین کا محکمہ کے عہدے داروں سے رابطہ قائم کرنے پر سُنا گیا کہ محکمہ کے ڈائریکٹر اور ڈپٹی ڈائریکٹر کشمیر میں آپس میں تال میل کا فقدان ہے جس درمیان بیچارے مقامی مُصنفین خواہ مخواہ پس رہے ہیں اور ڈائریکٹر صاحب بھی اس میں کچھ خاص دلچسپی نہیں لے رہے ہیں ،دریں اثناء ایل جی آفس سے زور ڈلوا کر ،کفر ٹوٹا خُدا خدا کرکے ،چار ماہ بعد آرڈر تو دئیے گئےوہ بھی آٹے میں نمک کے برابر ،اب بات کریں ایس پی ایس لائبریری جو کہ شہر سرینگر کے وسط میں واقع ہے ،جب مُصنفین وہاں کتب جمع کرانے جاتے ہیں تو وہاں کی دونوں لِفٹ بند پڑی ہیں ،یہ سوچنے کا مقام ہے کہ ایک ساٹھ یا ستر سالہ بزرگ اس عمارت کی چوتھی منزل پر پچاس کتابوں کا بنڈل کیسےپہنچا سکے گا جس کے ایک سو بیس زینے ہیں، کیا ڈائریکٹر صاحب کو اس جانب توجہ نہیں دینی چاہیے کہ اس عمارت میں لگی ہوئی لِفٹ کو کارآمد بنانے کے لئے اُس محکمہ کے آفیسران سے رابطہ قائم کرکے انہیں استعمال میں لایا جائے، جب استقبالیہ پر بیٹھے ہوئے ملازمین سے اس بابت دریافت کیا گیا تو انہوں نے بتایا کہ ’’ ارے صاحب آپ لِفٹ کی بات کرتے ہیں یہاں ہم لوگ چلہ کلاں کی ٹھنڈ میں سردی سے ٹھٹھر رہے ہیں اوپر تو اے سی لگے ہوئے ہیں لیکن نیچےہم خُدا کےرحم و کرم پر ہیں ،واضح رہے کہ اس لائبریری کو کرڑوں کی لاگت سے جدید طرز پر تعمیر کیا گیا ہے لیکن ان حالات میں لِفٹ کا نہ چلنا مُصنفین کے لئے سوحانِ روح بنتا ہے اگر اتنے بڑے محکمہ کا ڈائریکٹر ان مسائل کی جانب دھیان دینے کے بجائے جموں کے معتدل موسم کے مزے لوٹنے کو ترجیح دے تو پھر مقامی مُصنفین اور ملازمین کا خُدا ہی حافظ ہے ۔گورنر انتظامیہ کو ان مسائل کی جانب خصوصی توجہ دے کر لائبریری محکمہ کی کارکرگی کا جائزہ لینا چاہئے اور ڈائریکٹر و ڈپٹی ڈائریکٹر کو جوابدہ بنانا چاہیے اگر مذکورہ افسران لیت و لعل سے کام لےکر لوگوں کی مشکلات میں اضافہ کرنےپر تُلے ہوئے ہیں اور آپسی چپقلش کی وجہ سے محکمہ کے کام کاج میں رکاوٹ پیدا ہوتی ہیں اور لوگوں کے مسائل حل ہونے کے بجائے بڑھتے رہیں تو گورنر انتظامیہ کو ان کا متبادل تلاش کر کے یہاں تعینات کرنے چاہیں تاکہ محکمہ کا کام کاج خوش اسلوبی سے انجام پاسکے اور آئندہ مقامی مُصنفین کو ایسے مسائل کا سامنا نہ کرنا پڑے ورنہ مقامی مُصنفین تو یہی کہیں گے :-
ہمیں تقدیر نے لوح و قلم بخشے تو لیکن ہمارا آب و دانہ لکھ دیا ہے چور ہاتھوں میں

متعلقہ خبریں

سرینگر /22مئی / این این این
انتظامیہ کی جانب سے رہبر جنگلات، رہبر زراعت، اور رہبر کھیل کے تحت ہوئیں تعیناتیوں.

سرینگر /22مئی / این این این بارشوں کے بعد جموں کشمیر کے کئی علاقوں میں شبانہ درجہ حرارت معمول سے کچھ نیچے درج کیا گیا.

کیمپ میں سینکڑوں مریضوں کا طبی معائنہ کیا گیا اور مفت ادویات بھی تقسیم کی گئیں پلوامہ/ تنہا ایاز/ جنوبی ضلع پلوامہ.

سرینگر /21مئی // این این این سرینگر جموں شاہراہ پر خونی نالے کے قریب زیر تعمیر ٹنل مہند م ہونے کے بعد لاپتہ مزدوروں.

صدرِ نیشنل کانفرنس ڈاکٹر فاروق عبداللہ (رکن پارلیمان) نے آج نٹی محلہ میر بحری کلان رینہ واری (ڈل) جاکر وہاں گذشتہ.