ویڑیو

ای پیپر

اہم خبریں

سرینگر / 24مئی /این این این //سرینگر کے صورہ علاقے میں مشتبہ عسکریت پسندوں کی.

سرینگر / 24مئی /این این این//نیشنل کانفرنس کے اراکین پارلیمان ایڈوکیٹ محمد.

سرینگر / 24مئی /این این این /جنوبی ضلع اننت ناگ کے سنگم علاقے میںسڑک کے المناک.

ا فغانستان میں حالات مستحکم ہونے کے بعد غیرملکی جنگجو جموں و کشمیر میں داخل ہونے کی کوشش کر سکتے ہیں

   76 Views   |      |   Wednesday, May, 25, 2022

ہمسایہ ممالک کے ساتھ سرحدی تنازعات کا پُر امن حل بھارت کی خواہش

ہندوستانی مسلح افواج کسی بھی صورتحال سے نمٹنے کیلئے تیار
شہری ہلاکتیں باعث تشویش معاملہ ، دہشت پھیلانے کی ناقابل قبول کوششـ: آرمی چیف جنرل ایم ایم نراوانے
سری نگر:۹،اکتوبر:جے کے این ایس : چیف آف آرمی سٹاف جنرل منوج مکندنراوانے نے سنیچرکے روز’ افغان نژاد غیر ملکی جنگجوئوں کے جموں و کشمیر میں گھسنے کی کوشش کے امکان کو مسترد نہیں کیا‘۔ انہوںنے کہاکہ افغانستان میں حالات مستحکم ہو گئے توغیر ملکی جنگجوئوں کے جموں و کشمیر میں داخل ہونے کی کوشش کرسکتے ہیں۔آرمی چیف اسی طرح کے واقعات کا حوالہ دیا جب طالبان2 دہائیوں قبل افغانستان میں برسر اقتدار میں تھے۔جنرل ایم ایم نروانے نے تاہم واضح کیاکہ ہندوستانی مسلح افواج کسی بھی صورت حال سے نمٹنے کیلئے تیار ہیں کیونکہ ان کے پاس ایک بہت مضبوط انسداد دراندازی گرڈ ہے اور ساتھ ہی جموں و کشمیر کے اندرونی علاقوں میں دہشت گردی کی سرگرمیوں کو چیک کرنے کا ایک طریقہ کار ہے۔جے کے این ایس مانٹرینگ ڈیسک کے مطابق میڈیا گروپ ’انڈیا ٹوڈے کانفرنس ‘میں پوچھے گئے سوال کہ کیا کشمیر میں شہریوں کی حالیہ ہلاکتوں اور افغانستان میں طالبان کے اقتدار پر قبضے کے درمیان کوئی تعلق ہے ، جنرل نراوانے کہا کہ یہ نہیں کہا جا سکتا کہ کوئی تعلق ہے یا نہیں۔آرمی چیف نے کہا کہ یقینی طور پر (جموں و کشمیر میں) سرگرمیوں میں تیزی آئی ہے لیکن کیا ان کا براہ راست تعلق افغانستان میں کیا ہو رہا ہے یا کیا ہو رہا ہے ، ہم واقعی نہیں کہہ سکتے۔انہوں نے کہا کہ لیکن ہم ماضی سے جو کچھ کہہ سکتے ہیں اور سیکھ سکتے ہیں وہ یہ ہے کہ جب سابقہ طالبان حکومت اقتدار میں تھی ، اس وقت یقینی طور پر ہمارے پاس جموں و کشمیر میں افغان نژااد غیر ملکی جنگجوموجود تھے۔چیف آف آرمی سٹاف نے مزید کہا کہ اس وجہ سے یقین کرنے کی وجوہات ہیں کہ ایک بار پھر وہی ہو سکتا ہے کہ جب افغانستان کے حالات مستحکم ہو جائیں گے ، تب ہم اُن جنگجوؤں کی افغانستان سے جموں و کشمیر میں آمد دیکھ سکتے ہیں۔آرمی چیف نے کہا کہ ہندوستانی مسلح افواج ایسی کسی بھی کوشش سے نمٹنے کے لئے پوری طرح تیار ہیں۔انہوںنے کہا’’ ہم اس طرح کی کسی بھی صورت حال کیلئے تیار ہیں۔ ہمارے پاس ایک بہت مضبوط انسداد دراندازی گرڈ ہے جو اُنہیں سرحد پر روکنے کیلئے ہے۔ ہمارے پاس اندرونی علاقوں میں انسداد دہشت گردی کا بہت مضبوط گرڈ ہے تاکہ اس طرح کی کسی بھی کارروائی کا خیال رکھا جا سکے۔انہوںنے کہاکہ جس طرح ہم نے2000 کی دہائی کے اوائل میں ان (غیرملکی جنگجوئوں)سے نمٹا تھا ، اب بھی ہم اُن کے ساتھ بھی نمٹیں گے اگر وہ ہمارے قریب کہیں بھی آئیں گے۔جموں و کشمیر میں ٹارگٹ کلنگ پر ، آرمی چیف نے کہا کہ یہ ‘تشویش‘کا معاملہ ہے اور انہوںنے ایسے واقعات کو قابل مذمت قرار دیا۔انہوںنے کہاکہ دہشت گرد معمول کے حالات نہیں چاہتے،اوریہ اُن کی جانب سے متعلقہ رہنے کی آخری کوشش ہے۔چیف آف آرمی سٹاف جنرل منوج مکندنراوانے کہاکہ عوام بغاوت کریں گے۔انہوںنے سوالیہ اندازمیں کہاکہ اگر وہ (جنگجو) کہتے ہیں کہ وہ یہ سب لوگوں کیلئے کر رہے ہیں ، تو پھر آپ اپنے ہی لوگوں کو کیوں مار رہے ہیں جو آپ کے سپورٹ بیس ہیں۔آرمی چیف نے کہاکہ یہ صرف دہشت پھیلانے کی کوشش ہے جو کہ مکمل طور پر ناقابل قبول ہے۔ہندوستان اور پاکستان کے درمیان جنگ بندی معاہدے کے بارے میں ، جنرل ناراوانے نے کہا کہ اسے فروری سے چار ماہ کے لیے’مجموعی طور پر‘ دیکھا گیا۔انہوںنے کہاکہلیکن جولائی کے آخر سے ستمبر تک اور اب اکتوبر کے آغاز سے ، چھٹ پھٹ واقعات دوبارہ شروع ہو گئے ہیں۔آرمی چیف کاکہناتھاکہ میں پھر سوچتا ہوں ، یہ2003 کے طرز پر چل رہا ہے جب یہ ایک عجیب و غریب واقعہ سے شروع ہو گا اور جنگ بندی نہ ہونے کے برابر ہو جائے گا۔انہوںنے کہاکہ پچھلے مہینے یا اس سے زیادہ، ہم دوبارہ دراندازی کی نئی کوششیں دیکھ رہے ہیں۔ ہم نے ایسی دو یا تین دراندازی کی کوششوں کو ناکام بنا دیا ہے۔انہوں نے کہا کہ دراندازی کی کوششوں کے علاوہ ، جنگ بندی کی خلاف ورزی کے تین واقعات ہوئے ہیں جو کہ ایک پوسٹ دوسری پوسٹ پر فائرنگ ہے۔

متعلقہ خبریں

سرینگر / 24مئی /این این این //سرینگر کے صورہ علاقے میں مشتبہ عسکریت پسندوں کی فائرنگ میں پولیس اہلکار اور اس کی بیٹی.

سرینگر / 24مئی /این این این//نیشنل کانفرنس کے اراکین پارلیمان ایڈوکیٹ محمد اکبر لون اور جسٹس (ر) حسنین مسعودی نے دھان.

سرینگر / 24مئی /این این این /جنوبی ضلع اننت ناگ کے سنگم علاقے میںسڑک کے المناک حادثے میں 23سالہ موٹر سائیکل سوار لقمہ.

سرینگر / 24مئی /این این این //جنوبی ضلع کولگام کے ادی بل وٹو علاقے میں نالہ ویشو کے نزدیک ایک عدم شناخت شہری کی نعش.

نوٹ گزشتہ برسوں کے افسانوی ایونٹس کی کامیابی کو دیکھتے ہوئے ولر ادبی فورم نے اس سال بھی فن افسانہ کو فروغ دینے کے.