0

جموں کشمیر پولیس سب سے آگے

جموں کشمیر کی خصوصی پوزیشن کے خاتمہ کے بعد پتھراؤ ختم ، ریکارڈ توڑ سیاحوں کی آمد کے ساتھ تھیٹر اور فلمیں واپس آئیں/ امیت شاہ

سرینگر / 11اگست / جموں کشمیر پولیس ملی ٹنسی کے خلاف موثر طریقہ سے لڑرہی ہے کی بات کرتے ہوئے وزیر داخلہ امیت شاہ نے کہا کہ جموں کشمیر کی خصوصی پوزیشن کے خاتمہ کے بعد پتھراؤ ختم ہوا ۔ انہوں نے کہا کہ ریکارڈ توڑ سیاحوں کی آمد کے ساتھ ساتھ تھیٹر اور فلمیں 33 سال بعد واپس آئی جبکہ وزیر اعظم نریندر مودی کے دور حکومت میں محرم کے جلوس روایتی راستوں پر نکالے گئے۔ سی این آئی کے مطابق لوک سبھا میں اپنی تقریر کے دوران جموں و کشمیر پولیس کے کردار کی تعریف کرتے ہوئے کہا مرکزی وزیر داخلہ امیت شاہ نے کہا کہ جموں کشمیر پولیس وادی میں ملی ٹنسی کے خلاف مؤثر طریقے سے لڑ رہی ہے۔ انہوں نے کہا ’’جموں و کشمیر پولیس وادی کشمیر میں ملی ٹنسی کے خلاف مؤثر طریقے سے لڑ رہی ہے۔ یہ فورس سب سے آگے ہے اور اس نے ملی ٹنسی کا مقابلہ کرنے میں سنگ میل حاصل کیے ہیں‘‘۔ انہوں نے اعلی عسکریت پسند کمانڈروں کو ختم کر دیا ہے اور کشمیر میں ملی ٹنسی کی ہڈی کو توڑ دیا ہے۔ امیت شاہ نے کہا ’’وزیر اعظم مودی کے دور حکومت میں 33 سال کے وقفے کے بعد کچھ چیزیں ہوئیں جن میں پتھراؤ کا خاتمہ، ریکارڈ توڑ سیاحوں کی آمد، تھیٹرس اور فلموں کی واپسی اور محرم کا جلوس روایتی راستوں پر نکالا گیا‘‘۔انہوں نے کہا کہ بی جے پی ایک جمہوری پارٹی ہے اور جمہوری اقدار اور اقدار پر یقین رکھتی ہے۔ “جموں و کشمیر پر تین خاندانوں کی حکومت ہے ’’ این سی، پی ڈی پی اور کانگریس جنہوں نے کبھی پنچایتی انتخابات کرانے کی زحمت نہیں کی‘‘۔ یہ وزیر اعظم نریندر مودی کی حکومت تھی جس نے نومبر، دسمبر 2018 میں پنچایتی انتخابات نو مراحل کے تحت کرائے، اس طرح نچلی سطح پر جمہوریت کو یقینی بنایا۔ انہوں نے یہ بھی کہا کہ جرات مندانہ اور موثر اقدامات کی وجہ سے وزیر اعظم نریندر مودی کی قیادت والی حکومت نے وادی کشمیر میں پتھراؤ کو ختم کیا۔امیت شاہ نے مزید کہا’’آج جموں و کشمیر میں پتھراؤ کا کوئی نشان نہیں ہے‘‘۔وزیر اعظم نریندر مودی کے دور حکومت میں حاصل کی گئی کامیابیوں کا شمار کرتے ہوئے، مرکزی وزیر داخلہ امیت شاہ نے کہا کہ 33 سال کے وقفے کے بعد وادی کشمیر میں زمینی سطح پر بے مثال تبدیلیاں دیکھنے میں آئی ہیں۔ سال 2022میںجموں و کشمیر نے 1 کروڑ 80 لاکھ ریکارڈ توڑ سیاحوں کی آمد دیکھی۔ تین دہائیوں سے زیادہ کے بعد تھیٹر دوبارہ کھل گئے اور فلمیں فلمائی جا رہی ہیں۔ سب سے اہم بات یہ ہے کہ محرم کے جلوس جن پر این سی، پی ڈی پی اور کانگریس کی حکومتوں میں پابندی عائد تھی، انہیں اپنے روایتی راستوں پر نکالنے کی اجازت دی گئی ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں