ویڑیو

ای پیپر

اہم خبریں

عوام کی راحت رسانی اور متاثرین کی فوری بازآبادکاری کیلئے ٹھو س اقدامات.

سکھ یاتریو ںکا جتھا برسی میں شرکت کیلئے پاکستان پہنچ گیا سرینگر /22/جون 2022/.

حکومت کو چاہئے کہ وہ ہمارے دفاع کو مضبوط کرے لیکن اگنی پتھ اسکیم سے کمزور.

یوکرین جنگ میں روس کی حمایت چین کی تاریخی غلطی ہے، امریکہ

   33 Views   |      |   Friday, June, 24, 2022

یوکرین جنگ میں روس کی حمایت چین کی تاریخی غلطی ہے، امریکہ

امریکہ یوکرین کو مزید ایک ارب ڈالر کے فوجی امداد دے گا، دوسری طرف چین نے روس کو اس کے سلامتی خدشات کے حوالے سے حمایت برقرار رکھنے کا فیصلہ کیا ہے۔ جبکہ واشنگٹن کا کہنا ہے کہ بیجنگ یوکرین جنگ میں تاریخ کے غلط رخ پر ہے۔روس کی جانب سے مشرقی ڈونباس علاقے پر حملے کے درمیان امریکہ نے یوکرین کو مزید ایک ارب ڈالر کی فوجی امداد دینے کا اعلان کیا ہے۔ وائٹ ہاوس کے ترجمان جان کربی نے بتایا کہ امریکی صدر جو بائیڈن اور یوکرینی صدر وولودیمیر زیلنسکی کے درمیان فون پر بات چیت ہوئی جس کے بعد صدر بائیڈن نے یوکرین کے لیے مزید امداد کا اعلان کیا۔ انہوں نے بتایا کہ صدر جو بائیڈن نے زیلنسکی سے کہا کہ “امریکہ یوکرین کے ساتھ کھڑا رہے گا کیونکہ وہ بلا اشتعال روسی جارحیت کے خلاف اپنی جمہوریت کا دفاع کررہا ہے اور اپنی خودمختاری اور علاقائی سالمیت کی حفاظت کر رہا ہے۔” جوبائیڈن نے مزید کہا کہ یوکرینی عوام کی بہادری، مزاحمت اور عزم نے دنیا کو متاثر کیا ہے۔ جان کربی کے مطابق یوکرینی صدر نے صدر بائیڈن کو میدان جنگ اور زمینی صورت حال کے حوالے سے اپ ڈیٹ کیا۔ خبر رساں ادارے اے ایف پی کے مطابق امریکہ کی جانب سے مزید ایک ارب ڈالر کی فوجی امداد کے تحت یوکرین کو 155ملی میٹر ہوائٹزر اور ان کے لیے 30 ہزار روانڈ، گولہ بارود، زمینی ہارپون اینٹی شپ میزائل سسٹم اور راکٹ آرٹیلری سسٹم کے لیے اضافی راکٹ دیے جائیں گے۔ بعد ازاں یوکرین کے صدر وولودیمیر زیلنسکی نے بدھ کو عوام سے خطاب میں کہا کہ وہ اس پیکیج کے لیے امریکہ کے شکر گزار ہیں۔ چین کی طرف سے روس کو حمایت کا اعادہ چینی صدر شی جن پنگ نے روسی صدر ولادیمیر پوٹن کے ساتھ فون کا ل کے دوران ماسکو کی “خود مختاری اور سلامتی” کے لیے بیجنگ کی حمایت کا یقین دلایا۔ چین کی سرکاری خبر رساں ایجنسی زنہوا کے مطابق بدھ کے روز ہونے والی اس بات چیت کے دوران صد ر شی جن پنگ نے کہا کہ “تمام فریقین کو یوکرین بحران کے مناسب حل کے لیے ذمہ دارانہ کردار ادا کرنا چاہئے۔” انہو ں نے کہا کہ “چین بنیادی مفادات، خود مختاری اور سلامتی جیسے خدشات سے متعلق امور پر روس کو باہمی تعاون کی پیش کش جاری رکھے گا۔” 24فروری کو یوکرین پر روس کی فوجی کارروائی کے بعد سے شی جن پنگ اور پوٹن کے درمیان یہ دوسری بات چیت تھی۔ خیال رہے کہ چین نے یوکرین پر روس کی فوجی کارروائی کی اب تک نکتہ چینی نہیں کی ہے۔ اس دوران کریملن سے جاری ایک بیان میں کہا گیا ہے کہ دونوں رہنماوں نے “مغرب کی غیر قانونی پابندیوں کی پالیسی کی وجہ سے عالمی معیشت کی صورت حال کو مدنظر رکھتے ہوئے توانائی، مالیاتی، صنعتی، ٹرانسپورٹ اور دیگر شعبوں میں تعاون کو وسعت دینے پر بھی اتفاق کیا۔” ‘چین تاریخ کے غلط رخ پر ہے اس دوران امریکہ نے روس کے ساتھ چین کی طرفداری پر تشویش کا اظہار کرتے ہوئے خبردار کیا کہ جن ممالک نے یوکرین پر حملہ کرنے میں روسی صدر ولادیمیر پوٹن کا ساتھ دیا وہ ‘تاریخ کی غلط سمت پر کھڑے ہیں۔ امریکی محکمہ خارجہ کے ترجمان نے کہا کہ چین غیر جانبدار ہونے کا دعویٰ کرتا ہے، لیکن اس کے رویے سے ظاہر ہوتا ہے کہ وہ روس کے ساتھ قریبی تعلقات میں سرمایہ کاری جاری رکھے ہوئے ہے۔

متعلقہ خبریں

عوام کی راحت رسانی اور متاثرین کی فوری بازآبادکاری کیلئے ٹھو س اقدامات اٹھائے جائیں/ڈاکٹر فاروق سرینگر /22/جون.

سکھ یاتریو ںکا جتھا برسی میں شرکت کیلئے پاکستان پہنچ گیا سرینگر /22/جون 2022/ 500سکھ مسافر آج مہاراجہ رنجیت سنگھ کی.

حکومت کو چاہئے کہ وہ ہمارے دفاع کو مضبوط کرے لیکن اگنی پتھ اسکیم سے کمزور ہوجائے سرینگر /22/جون 2022/ کانگریس رہنما.

انسداد شدت پسندی ، تجارت، صحت، روایتی ادویات، ماحولیات اور اختراعات، زراعت پر بات ہو گی سرینگر /22/جون 2022/ وزیر اعظم.

دریا جہلم اور ندی نالوں میں پانی کی سطح میں اضافہ ہونے کے ساتھ ہی شمال و جنوب میں سیلابی صورتحال سرینگر.