ویڑیو

ای پیپر

اہم خبریں

جموں کے بکرم چوک میں ایک المناک حادثے میں گاڑی دریا تیوی میں گر گئی جس کے.

پولیس نے دعویٰ کیا ہے کہ سادھنا ٹاپ پر خاتون سمیت تین افراد سات کلو نارکوٹکس.

گاندربل میں نوجوان کو مردہ پایا گیا وسطی ضلعع گاندربل کے گاڈوہ کھیتوں میں.

دسویں اور بارہویں جماعت پاس امید وار درجہ چہارم کیلئے موزوں امیدوار

   112 Views   |      |   Saturday, May, 28, 2022

عدالت عالیہ میں اعلیٰ تعلیم یافتہ نوجوانوں کی دونوں اپیلیں مسترد، اعلیٰ تعلیم یافتہ درجہ چہارم کیلئے نااہل

سرینگر/16نومبر/جموں و کشمیر اور لداخ ہائیکورٹ نے اعلیٰ تعلیم یافتہ درخواست دہندگان کی دونوں اپیلوں کو مسترد کرتے ہوئے اعلیٰ تعلیم یافتہ نوجوانوں کو سرکاری محکموں میں درجہ چہارم کے عہدوں کے لیے نااہل قرار دینے کے فیصلے کو برقرار رکھا۔کرنٹ نیو زآف انڈیا کے مطابق جموں و کشمیر اور لداخ ہائی کورٹس نے اعلیٰ تعلیم یافتہ درخواست دہندگان کی دونوں اپیلوں کو مسترد کرتے ہوئے اعلیٰ تعلیم یافتہ نوجوانوں کو سرکاری محکموں میں درجہ چہارم کے عہدوں کے لیے نااہل قرار دینے کے فیصلے کو برقرار رکھا۔ عدالت نے کہا کہ آجر کو کسی بھی عہدے کے لیے موزوں تعلیمی قابلیت کا تعین کرنے کا حق حاصل ہے، بشرطیکہ یہ صوابدیدی یا کسی استدلال کے معیار کے خلاف نہ ہو۔ہائی کورٹ کی سنگل بنچ کے فیصلے کو برقرار رکھتے ہوئے جسٹس علی محمد ماگرے اور جسٹس سنجے دھر کی ڈویڑن بنچ نے کہا کہ درجہ چہارم کے عہدوں پر بھرتی کے لیے کم از کم 10ویں اور زیادہ سے زیادہ 12ویں جماعت کی تعلیمی قابلیت بالکل واضح ہے۔ عدالت اسے صوابدیدی یا غلط نہیں سمجھتی۔ بنچ نے کہا کہ عدالت اس بات کے تعین میں مداخلت نہیں کر سکتی کہ آجر درخواست دہندہ کو کس عہدے کے لیے موزوں پاتا ہے۔ اس میں مداخلت اسی وقت کی جا سکتی ہے جب یہ صوابدیدی ہو اور اس معاملے میں یہ صوابدیدی نہیں ہے۔عدالت نے کہا کہ درجہ چہارم کے عہدوں کے لیے 12ویں پاس کے لیے زیادہ سے زیادہ تعلیمی قابلیت طے کرنے کے پیچھے کئی وجوہات ہیں۔ اگر اعلیٰ تعلیم یافتہ افراد کو یہ عہدہ ملے گا تو وہ چھوٹے کام کے لیے موزوں آپشن ثابت نہیں ہو سکتے، جب کہ دسویں سے بارہویں پاس کے امیدوار یہ کام زیادہ مؤثر طریقے سے کر سکیں گے۔بنچ نے کہا کہ اگر اعلیٰ تعلیم یافتہ امیدواروں کو درجہ چہارم کے عہدے مل بھی جائیں تو بھی وہ اعلیٰ عہدوں کے لیے کوششیں جاری رکھیں گے۔ اگر انہیں اعلیٰ آسامیوں پر منتخب کیا جاتا ہے تو چوتھے درجے کی پوسٹیں دوبارہ خالی ہو جائیں گی، جس کے لیے بھرتی کا عمل نئے سرے سے شروع کرنا پڑ سکتا ہے۔عدالت نے کہا کہ اگر بھرتی میں 10ویں سے 12ویں جماعت تک مقابلہ اعلیٰ تعلیم یافتہ افراد سے ہوگا تو صرف اعلیٰ تعلیم یافتہ کا انتخاب کیا جائے گا۔ ایسی صورت حال میں مشتہر پوسٹ کے لیے موزوں ترین امیدوار کا دعویٰ متاثر ہوگا۔

متعلقہ خبریں

جموں کے بکرم چوک میں ایک المناک حادثے میں گاڑی دریا تیوی میں گر گئی جس کے نتیجے میں ڈرائیو اور کنڈیکٹر کی موت ہوئی پولیس.

پولیس نے دعویٰ کیا ہے کہ سادھنا ٹاپ پر خاتون سمیت تین افراد سات کلو نارکوٹکس اور 2آئی ای ڈی سمیت گرفتار کئے گئے پولیس.

گاندربل میں نوجوان کو مردہ پایا گیا وسطی ضلعع گاندربل کے گاڈوہ کھیتوں میں 28سال کے نوجوان کی نعش برآمد کرلی گئی پولس.

صدرِ جموں وکشمیر نیشنل کانفرنس و رکن پارلیمان ڈاکٹر فاروق عبد للہ نے حضرت میرک شاہ صاحب ؒ کے سالانہ عرص مبارک باد.

کونہِ بل پانپور میں آج صبح ایک دلدوز سانحہ پیش آیا جسمیں دو افراد موت کی آغوش میں چلے گۓ۔ کونہِ بل علاقے میں کھیتوں.