ویڑیو

ای پیپر

اہم خبریں

سرینگر / 24مئی /این این این //سرینگر کے صورہ علاقے میں مشتبہ عسکریت پسندوں کی.

سرینگر / 24مئی /این این این//نیشنل کانفرنس کے اراکین پارلیمان ایڈوکیٹ محمد.

سرینگر / 24مئی /این این این /جنوبی ضلع اننت ناگ کے سنگم علاقے میںسڑک کے المناک.

جموں کے مضافاتی علاقہ میں ڈرون کی سرگرمیوں کے بعد

   58 Views   |      |   Tuesday, May, 24, 2022

ارینہ سیکٹر میں بین الاقوامی سرحد کے قریب پاکستانی ڈرون کی نقل و حرکت

کنٹرول لائن کے نزدیک تلاشی آپریشن بڑے پیمانے پر جاری
سرینگر/12جنوری/جموں کے مضافاتی علاقے میں گزشتہ شب کنٹرو ل لائن کے نزدیک ڈرون کی مشکوک نقل و حمل دیکھنے کے بعد سرحدی علاقوں میں بڑے پیمانے پر تلاشی آپریشن شروع کر دیا گیا ہے تاہم کسی بھی جگہ سے ابھی تک کوئی قابل اعتراض مواد بر آمد نہیں ہوا ۔ سی این آئی کے مطابق جموں کے سندھ ون کانہ چک نامی علاقے میں منگل کی شام دیر گئے ڈورن سرگرمیاں دیکھی گئی جس کے بعد وہاں تلاشی آپریشن شروع کر دیا گیا ۔ ذرائع سے معلوم ہو اہے کہ کچھ مقامی لوگوں نے سرحد کے قریب ڈورن کی نقل و حمل دیکھی جس کے بعد انہوں نے پولیس کو مطلع کیا ۔ بتایا جاتا ہے کہ اطلاع ملتے ہی پولیس و بی ایس ایف کی پارٹی جائے موقعہ پر پہنچ گئی جس کے بعد انہوں نے سرحدی علاقے کو محاصرے میںلیکر تلاشی کارروائی شروع کر دی ہے تاہم انہیں کچھ بھی حاصل نہیں ہوا۔پولیس کے ایک سنیئر آفیسر نے اس کی تصدیق کرتے ہوئے بتایا کہ جموں کے سندھ ون کانہ چک علاقے میں گزشتہ شب ڈرون سرگرمیاں دیکھی گئی جس کے بعد وہاںتلاشی آپریشن شروع کر دیا گیا ہے ۔ انہوںنے بتایا کہ ڈرون کی سرگرمیوں کے بعد کنٹرول لائن کے متصل تمام علاقوں میں بڑے پیمانے پر تلاشی آپریشن جاری ہے تاہم ابھی تک کسی بھی جگہ سے کوئی قابل اعتراض چیز بر آمد نہیںہوئی ہے ۔

متعلقہ خبریں

سرینگر / 24مئی /این این این //سرینگر کے صورہ علاقے میں مشتبہ عسکریت پسندوں کی فائرنگ میں پولیس اہلکار اور اس کی بیٹی.

سرینگر / 24مئی /این این این//نیشنل کانفرنس کے اراکین پارلیمان ایڈوکیٹ محمد اکبر لون اور جسٹس (ر) حسنین مسعودی نے دھان.

سرینگر / 24مئی /این این این /جنوبی ضلع اننت ناگ کے سنگم علاقے میںسڑک کے المناک حادثے میں 23سالہ موٹر سائیکل سوار لقمہ.

سرینگر / 24مئی /این این این //جنوبی ضلع کولگام کے ادی بل وٹو علاقے میں نالہ ویشو کے نزدیک ایک عدم شناخت شہری کی نعش.

نوٹ گزشتہ برسوں کے افسانوی ایونٹس کی کامیابی کو دیکھتے ہوئے ولر ادبی فورم نے اس سال بھی فن افسانہ کو فروغ دینے کے.