ویڑیو

ای پیپر

اہم خبریں

سرینگر / 24مئی /این این این //سرینگر کے صورہ علاقے میں مشتبہ عسکریت پسندوں کی.

سرینگر / 24مئی /این این این//نیشنل کانفرنس کے اراکین پارلیمان ایڈوکیٹ محمد.

سرینگر / 24مئی /این این این /جنوبی ضلع اننت ناگ کے سنگم علاقے میںسڑک کے المناک.

راجوری میں زعفران کی کامیاب کاشت

   76 Views   |      |   Tuesday, May, 24, 2022

راجوری میں زعفران کی کامیابراجوری میں زعفران کی کامیاب کاشت کاشت

کسانوںکے چہرے کھل اُٹھے

سرینگر/04جنوری/کشتواڑ اور وادی کشمیر کے بعد اب کسان کو جموں و کشمیر کے راجوری ضلع میں زعفران کی کاشت میں کامیابی ملی ہے۔ جس سے علاقے کے تمام کسانوں کے چہرے خوشی سے کھل اٹھے ہیں۔کرنٹ نیوز آف انڈیا کے مطابق جموں و کشمیر کے راجوری ضلع میں اپنے کھیتوں میں زعفران کی کامیابی سے کاشت کی گئی ہے۔ لوگ اپنے کھیتوں میں جامنی نارنجی کے پھول کھلتے دیکھ کر حیران رہ گئے۔ جموں کے کشتواڑ علاقے میں زعفران کی کاشت سے متاثر ہو کر راجوری انتظامیہ نے بھی ضلع میں زعفران کی کاشت پر غور کیا۔ آپ کو بتاتے چلیں کہ وادی کشمیر کے پامپور علاقے کے علاوہ وادی سے باہر صرف کشتواڑ ضلع میں زعفران کی کاشت کی جاتی ہے۔کسان وشال چندر شرما نے کہا کہ یہ ایک خواب ہے جو پورا ہوا۔ میں نے کبھی نہیں سوچا تھا کہ راجوری میں زعفران کی کاشت ہو سکتی ہے۔ لیکن ہم جموں و کشمیر کے نئے علاقوں میں زعفران کی کاشت کرنے میں کامیاب ہوئے۔ انہوں نے راجوری کی ضلعی انتظامیہ اور محکمہ زراعت کا زعفران کی کاشت کے لیے حوصلہ افزائی کرنے پر اظہار تشکر کیا۔محکمہ زراعت کے حکام نے بتایا کہ وشال چندر شرما پہلے گندم اور مکئی کی کاشت کرتے تھے تاکہ ضروریات زندگی کو پورا کیا جا سکے لیکن اب وہ اپنے کھیتوں میں زعفران کی کاشت کر رہے ہیں تاکہ زیادہ آمدنی حاصل کی جا سکے اور اپنی سماجی و اقتصادی حالت کو بہتر بنایا جا سکے۔عہدیداروں نے بتایا کہ وشال چندر کو 15 مرلہ میں زعفران کی کاشت کرنے پر آمادہ کیا گیا تھا جس کے لئے محکمہ زراعت نے پامپور کشمیر سے زعفران کے بیج منگوائے تھے۔ ان کو بیج کے علاوہ کچھ دیگر امداد بھی فراہم کی گئی جیسے کھاد، لیبر چارجز، جڑی بوٹی مار ادویات وغیرہ۔ زعفران اگانے کا کوئی پیشگی تجربہ نہ ہونے کی وجہ سے کشتواڑ کے ماہرین کی مدد لی گئی جنہوں نے زعفران کی کاشت میں شرما کی مدد کی۔انہوں نے بتایا کہ بیج کی بوائی 24 اگست 2021 کو کی گئی تھی۔ 12 دسمبر 2021 کو پھول کھلنا شروع ہوئے۔ کھلنے کا عمل 15 دن تک جاری رہا، جس کے نتیجے میں کل 734 پھول اور روزانہ اوسطاً 45-50 پھول نکلتے ہیں۔ جس کے بعد پھول توڑے گئے۔انہوں نے بتایا کہ آس پاس کے کاشتکار بھی متوجہ ہیں اور انہوں نے آنے والے سیزن میں زعفران کی کاشت کی خواہش ظاہر کی ہے۔ عہدیداروں نے کہا کہ اب محکمہ زراعت اور کسان کے لیے چیلنج ہے کہ وہ مستقبل کی کاشت کے لیے بیجوں کو محفوظ رکھیں۔ عہدیداروں نے کہا کہ زعفران کی کاشت کا ٹرائل اس سمت میں صرف ایک اور قدم ہے اور کاشتکار برادری کی فلاح و بہبود کے لیے مستقبل قریب میں اور بھی بہت کچھ آنے والا ہے۔

متعلقہ خبریں

سرینگر / 24مئی /این این این //سرینگر کے صورہ علاقے میں مشتبہ عسکریت پسندوں کی فائرنگ میں پولیس اہلکار اور اس کی بیٹی.

سرینگر / 24مئی /این این این//نیشنل کانفرنس کے اراکین پارلیمان ایڈوکیٹ محمد اکبر لون اور جسٹس (ر) حسنین مسعودی نے دھان.

سرینگر / 24مئی /این این این /جنوبی ضلع اننت ناگ کے سنگم علاقے میںسڑک کے المناک حادثے میں 23سالہ موٹر سائیکل سوار لقمہ.

سرینگر / 24مئی /این این این //جنوبی ضلع کولگام کے ادی بل وٹو علاقے میں نالہ ویشو کے نزدیک ایک عدم شناخت شہری کی نعش.

نوٹ گزشتہ برسوں کے افسانوی ایونٹس کی کامیابی کو دیکھتے ہوئے ولر ادبی فورم نے اس سال بھی فن افسانہ کو فروغ دینے کے.