ویڑیو

ای پیپر

اہم خبریں

سرینگر /22مئی / این این این
انتظامیہ کی جانب سے رہبر جنگلات، رہبر زراعت،.

سرینگر /22مئی / این این این بارشوں کے بعد جموں کشمیر کے کئی علاقوں میں شبانہ.

کیمپ میں سینکڑوں مریضوں کا طبی معائنہ کیا گیا اور مفت ادویات بھی تقسیم کی.

سال 2021 کا اختتام: ڈرونز اور ٹارگٹ کلنگ سیکورٹی فورسز کیلئے چلینج رہا

   74 Views   |      |   Sunday, May, 22, 2022

ارینہ سیکٹر میں بین الاقوامی سرحد کے قریب پاکستانی ڈرون کی نقل و حرکت

سرینگر/31دسمبر/سال 2021میں ٹارگیٹ کلنگ اور ڈرون سرگرمیاں سیکورٹی ایجنسیوں کیلئے بڑا چلینج رہا اور اس صورتحال پر مرکزی وزارت داخلہ بھی کافی حد تک فکر و تشویش میںمبتلاء رہی تاہم نئے سال میں ٹارگیٹ کلنگ اور ڈرون سرگرمیوں کو روکنے کیلئے ڈی آر ڈی او کی مدد سے سرحدوں پر اینٹی ڈرون سسٹم نصب کیا جارہا ہے جبکہ ٹارگیٹ کلنگ کے ممکنہ واقعات کو ناکام بنانے کیلئے بھی فورسز نے نئی حکمت عملی مرتب کرلی ہے ۔ کرنٹ نیوز آف انڈیا کے مطابق ڈرونز اور ٹارگٹ کلنگ سال 2021 میں سیکیورٹی اداروں کے لیے ایک بڑا چیلنج رہا۔ یہ چیلنج نئے سال میں بھی جاری رہے گا، ملک میں پہلا ڈرون حملہ جموں میں ایئر فورس اسٹیشن پر کیا گیا۔ ایسے میں اب نئے سال میں سیکورٹی اداروں کے لیے سب سے بڑا چیلنج ڈرون سرگرمیوں کو روکنا ہے۔ اس کے علاوہ ٹارگیٹ کلنگ کے ذریعے کشمیر میں غیر کشمیریوں،اور پولیس اہلکاروں کو نشانہ بنایا گیا۔ مرکزی وزارت داخلہ بھی اس سے پریشان ہے۔ ڈرونز کے ذریعے ایسی جگہوں سے اسلحہ، گولہ بارود اور منشیات بھیجی جا رہی ہیں جن پر نظر رکھنا بہت مشکل ہے۔ ساتھ ہی تمام ایجنسیوں کو ٹارگٹ کلنگ کے حوالے سے مل کر کام کرنے کو کہا گیا ہے ۔ رواں سال میں 60 سے زائد ڈرون سرگرمیاں ہو چکی ہیں۔ ان میں سیکورٹی فورسز نے 40 سے زائد سرگرمیوں کا پتہ لگایا ہے۔ سیکیورٹی فورسز نے ڈرون سے گرائے گئے 30 سے زائد ہتھیار برآمد کر لیے ہیں۔ ان میں سے پستولوں کی تعداد 20 کے قریب ہے۔ اس کے علاوہ اے کے 47، اے کے 56 اور کاربائن جیسے ہتھیار بھی برآمد ہوئے ہیں۔ ڈرون سے گرائی گئی منشیات کی کھیپ بھی برآمد ہوئی ہے۔ ڈرونز تقریباً 20 بار منشیات گرا چکے ہیں۔ ڈرون کے ذریعے آئی ای ڈیز بھی بھیجی گئیں۔ آئی ای ڈی بھیجنے کے چار سے پانچ کیسز بھی ہیں۔جموں ایئر فورس اسٹیشن پر رواں برس27 جون کو حملہ ہوا تھا۔ یہ ملک میں پہلا ڈرون حملہ تھا۔27 جون کو ہی جموں کے بھٹنڈی سے 5 کلو گرام آئی ای ڈی برآمد کیا گیا 16 جولائی کو اکھنور میں پولیس نے 6 کلو آئی ای ڈی لے جانے والے ڈرون کو مار گرایا تھا۔اسی طرح3 اکتوبر کو ڈرون سے گرائے گئے ہتھیار جموں کے فلائی مین منڈل میں برآمد ہوئے تھے۔جبکہ4 جون کو راجوری ایل او سی پر ڈرون سے گرائے گئے ہتھیار برآمد ہوئے۔اس کارروائی کو جاری رکھتے ہوئے فورسز نے 9 ستمبر کو راجوری میں ہتھیار پھینکنے کے بعد ہتھیار لینے والے تین افراد کو گرفتار کیا گیا۔جون سے اگست تک جموں و کشمیر میں ڈرون سرگرمیاں زیادہ ہوئیں لیکن جیسے ہی اس پر کسی حد تک قابو پایا گیا، وادی میں ٹارگیٹ کلنگ شروع ہوئی۔ صرف اکتوبر میں 11 شہریوں کو قتل کیا گیا۔ ان میں کشمیری پنڈت، بی جے پی مسلم کارکن ،غیر کشمیری اور پولیس اہلکار شامل تھے۔2 اکتوبر کو محمد شفیع ڈار اور ماجد احمد گوجری کو جنگجوئوں نے سیکورٹی فورسز کے مخبر ہونے کے شبہ میں قتل کر دیا تھا۔اسی طرح 5 اکتوبر کو کشمیری پنڈت مکھن لال بندرو کو قتل کر دیا گیا۔ اسی دن بہار کے ایک اسٹریٹ فروش وریندر پاسوان کو گولی مار دی گئی۔جبکہ 7 اکتوبر کو ایک سکھ ٹیچر سپیندر کور کو اسکول میں گھس کر اسے گولی مار دی گئی۔ اسی اسکول میں تعینات جموں کے ایک استاد دیپک چند کو بھی گولی مار دی گئی تھی ۔16 اکتوبر کو اتر پردیش کے ایک کاریگر صغیر احمد کو گولی مار کر ہلاک کر دیا گیا۔ اسی دن بہار کے رہنے والے گولا گپے کے اروند کمار کو بھی قتل کر دیا گیا۔سی این آئی کے مطابق یہ سلسلہ ادھر نہیں رُکا بلکہ 13 ستمبر کو سب انسپکٹر ارشد کو ملی ٹنٹوں نے گولی مار کر ہلاک کر دیا تھا۔یاد رہے کہ فروری میں پاکستان نے سرحد پر جنگ بندی کی درخواست کی تھی۔ فروری سے سال کے آخر تک ایل او سی اور آئی بی پر جنگ بندی کی خلاف ورزی کے صرف 5 سے 7 واقعات ہوئے ہیں لیکن سرحد پار سے دراندازی کا سلسلہ جاری ہے۔ منشیات کی سمگلنگ جاری ہے۔ اس سب صورتحال کے بیچ فوج اور فورسز نے ٹاگیٹ کلنگ اور منشیات کی سمگلنگ کو روکنے کیلئے کئی طرح کی تیاریاں شروع کی ہیں۔ جہاں ریاستی تحقیقاتی ایجنسی جنگجو مخالف کارروائیوںکیلئے کام کرے گی وہیں اینٹی نارکوٹکس ٹاسک فورس بھی پوری قوت سے منشیات کے سمگلروں کے خلاف کریک ڈاؤن کرے گی۔ دونوں ایجنسیوں کے لیے کثیر المنزلہ پارکنگ کا ڈھانچہ تیار کیا جا رہا ہے۔ یہاں تکنیکی سہولیات دستیاب ہوں گی۔ اس کے علاوہ دونوں ایجنسیوں کے پاس 200 سے زائد اہلکاروں کی افرادی قوت ہوگی۔ این آئی اے ان ایجنسیوں کی بھی مدد کرے گی، تاکہ سرحد پار سے ہتھیاروں کی اسمگلنگ سے لے کر گولہ بارود تک نیٹ ورک چلانے والوں کے خلاف کریک ڈاؤن کیا جا سکے۔نئے سال میں ڈی آر ڈی او کی مدد سے بی ایس ایف اور ایس ایس جی بھی ڈرون مخالف نظام تیار کریں گے۔ جس سے ڈرون کی سرگرمیوں پر نظر رکھی جا سکتی ہے۔ اس کے لیے تیزی سے کام جاری ہے۔ آئی بی کے علاوہ انہیں اہم مقامات پر تعینات کیا جائے گا۔

متعلقہ خبریں

سرینگر /22مئی / این این این
انتظامیہ کی جانب سے رہبر جنگلات، رہبر زراعت، اور رہبر کھیل کے تحت ہوئیں تعیناتیوں.

سرینگر /22مئی / این این این بارشوں کے بعد جموں کشمیر کے کئی علاقوں میں شبانہ درجہ حرارت معمول سے کچھ نیچے درج کیا گیا.

کیمپ میں سینکڑوں مریضوں کا طبی معائنہ کیا گیا اور مفت ادویات بھی تقسیم کی گئیں پلوامہ/ تنہا ایاز/ جنوبی ضلع پلوامہ.

سرینگر /21مئی // این این این سرینگر جموں شاہراہ پر خونی نالے کے قریب زیر تعمیر ٹنل مہند م ہونے کے بعد لاپتہ مزدوروں.

صدرِ نیشنل کانفرنس ڈاکٹر فاروق عبداللہ (رکن پارلیمان) نے آج نٹی محلہ میر بحری کلان رینہ واری (ڈل) جاکر وہاں گذشتہ.