ویڑیو

ای پیپر

اہم خبریں

جموں کے بکرم چوک میں ایک المناک حادثے میں گاڑی دریا تیوی میں گر گئی جس کے.

پولیس نے دعویٰ کیا ہے کہ سادھنا ٹاپ پر خاتون سمیت تین افراد سات کلو نارکوٹکس.

گاندربل میں نوجوان کو مردہ پایا گیا وسطی ضلعع گاندربل کے گاڈوہ کھیتوں میں.

قاضی گنڈ میں بھاجپا کار کنان کی ہلاکت،منصوبہ بند سازش

   743 Views   |      |   Sunday, May, 29, 2022

لشکر اور ٹی آر ایف ملوث ،حملے میں استعمال کی گئی گاڑی ضبط:آئی جی پی کشمیر

سرینگر؍30، اکتوبر ؍ جموںو کشمیر پولیس کے انسپکٹر جنرل آف پولیس وجے کمار نے بتایا جنوبی کشمیر کے قاضی گنڈ علاقے میں بھارتیہ جنتا پارٹی(بی جے پی ) ورکران کی ہلاکت میںلشکر طیبہ اور ٹی آر ایف جنگجوئوں تنظیمیں ملوث ہیں ،جبکہ اس حملے میں استعمال کی گئی گاڑی کو ضبط کر کے تحقیقات میں سرعت لائی گئی ہے ۔کشمیر نیوز سروس(کے این ایس )کے مطابق جنوبی کشمیر کے قاضی گنڈ علاقے میںجمعرات کی شام ہوئی3بھاجپا کار کنان کی ہلاکت میں عسکری تنظیم لشکر طیبہ اور ٹی آر ایف ملوث ہیں، اس بات کی جانکاری انسپکٹر جنرل برائے کشمیر وجے کمار نے جمعہ کے روز دی ہے۔انہوں نے ب تایااس حملے میں جنگجوئوں کی جانب سے استعمال کی گئی گاڑی کو بھی ضبط کیا گیا ،اور تحقیقات میں تیزی لائی گئی ہے ۔ نامہ نگاروں کے ساتھ بات کرتے ہوئے پولیس کے انسپکٹر جنرل برائے کشمیر وجے کمار نے کہا کہ ایسا لگتا ہے کہ جنگجوئوں نے مذکورہ حملہ کیلئے پہلے سے ہی منصوبہ بندی کی تھی۔انہوں نے کہا’’ابھی تک نثار احمد کھانڈے، عباس شیخ ساکن کھڈونی اور ایک غیر مقامی جنگجوئوں کے ملوث ہونے کی بات سامنے آئی ہے‘‘۔آئی جی نے وضاحت کرتے ہوئے کہا ’’ جنگجو ایک کار میں آئے جو ایک مقامی شہری الطاف کی ہے۔وہ بھاجپا یوتھ جنرل سیکریٹری کی گاڑی کے قریب پہنچے اور اندھا دھند گولیاں چلائیں جس سے بھاجپا کارکنان زخمی ہوئے اور بعد میںزخموں کی تاب نہ لا کر دم توڑ بیٹھے۔وجے کمار کے مطابق اْس گاڑی کو تیلہ ونی گاوں میں پولیس پوسٹ اچھہ بل کے قریب ضبط کیا گیا ہے جس میں آکر جنگجوئوںنے بھاجپا کارکنوں کو حملے کا نشانہ بنایاتھا۔ایک سوال کے جواب میں آئی جی نے کہا کہ اگست5،2019کے بعد1619افراد کی نشاندہی کرکے اْنہیں پہلگام میں حفاظتی انتظامات کے تحت رکھا گیا تھا۔تاہم فدا حسین مذکورہ علاقہ سے نکل گیا تھا۔ اب پولیس اس بات کی تحقیقات کررہی ہے کہ تینوں مہلوکین حملے کے وقت اْس علاقے میں کیا کررہے تھے۔ آئی جی کا مزید کہنا تھا کہ 157بھاجپا کارکنوں کو سیکورٹی فراہم کی گئی ہے اور حفاظتی اہلکاروں کو بتایا گیا ہے کہ وہ بھاجپا کارکنان کو رات کے وقت باہر نکلنے کی اجازت نہ دیں۔انہوں نے بتایا اس حملے میں ملوث جنگجوئوں کو بہت جلد مار دیا جایت ۔اس قبل شمالی کشمیر میںبھی اسی طرح کے حملے میں بی جے پی کے کئی لیڈران کو ہلاک کیا گیا ہے ۔اس دوران ان ہلاکتوں کے ساتھ ہی بھاجپا لیڈران کے ساتھ ساتھ پنچائیت ممبران میں خوف و دہشت کی لہر دوڈ گئی ہے ۔ خیال رہے رہے ک جمعرات کی شام قاضی گنڈ کے یور خوشی پورہ علاقے میں جنگجوئوںکے حملے میں فدا حسین،عمر رشید بیگ اور عمر رمضان حجام نامی بھاجپا کارکنان ہلاک ہوگئے۔اس حملے کے ساتھ ہی پوری وادی کے ساتھ ساتھ جنوبی کشمیر میں سیکورٹی کو الرٹ کیا گئیا ہے جبکہ حملہ آوروں کو پکڑنے کے لئے جگہ جگہ ناکے بیٹھا ئے گئے تاہم تاحال اس حملے میں کسی کی گرفتاری عمل میں لائی گئی ہے۔ادھر بھاجپا لیڈران ان ہلاکتوں پر شدید الفاظ میں مزمت کرتے ہوئے مکمل اور فوری تحقیقات کا مطالبہ کیا ہے ۔

متعلقہ خبریں

جموں کے بکرم چوک میں ایک المناک حادثے میں گاڑی دریا تیوی میں گر گئی جس کے نتیجے میں ڈرائیو اور کنڈیکٹر کی موت ہوئی پولیس.

پولیس نے دعویٰ کیا ہے کہ سادھنا ٹاپ پر خاتون سمیت تین افراد سات کلو نارکوٹکس اور 2آئی ای ڈی سمیت گرفتار کئے گئے پولیس.

گاندربل میں نوجوان کو مردہ پایا گیا وسطی ضلعع گاندربل کے گاڈوہ کھیتوں میں 28سال کے نوجوان کی نعش برآمد کرلی گئی پولس.

صدرِ جموں وکشمیر نیشنل کانفرنس و رکن پارلیمان ڈاکٹر فاروق عبد للہ نے حضرت میرک شاہ صاحب ؒ کے سالانہ عرص مبارک باد.

کونہِ بل پانپور میں آج صبح ایک دلدوز سانحہ پیش آیا جسمیں دو افراد موت کی آغوش میں چلے گۓ۔ کونہِ بل علاقے میں کھیتوں.