ویڑیو

ای پیپر

اہم خبریں

صدرِ جموں وکشمیر نیشنل کانفرنس و رکن پارلیمان ڈاکٹر فاروق عبد للہ نے حضرت.

کونہِ بل پانپور میں آج صبح ایک دلدوز سانحہ پیش آیا جسمیں دو افراد موت کی.

جنوبی قصبہ قاضی گنڈ میں ٹرین کی ٹکر سے 50 سال کی خاتون لقمہ اجل بن گئیں فہمیدہ.

ناانصافی کے خلاف جدوجہد نیشنل کانفرنس کا بنیادی اصول حدبندی کمیشن کا قیام غیر قانونی

   76 Views   |      |   Saturday, May, 28, 2022

سی سی ٹی وی تاجروں اور کاروباریوں کو نصب کرنے کا حکم تاناشاہی پر مبنی

مجوزہ رپورٹ لوگوں کو تقسیم کرنے کی مذموم کوشش/ ڈاکٹر فاروق عبداللہ
سرینگر//17فروری//نیشنل کانفرنس کی بنیاد ناانصافی کیخلاف جدوجہد سے ہی پڑی ہے اور یہ جماعت آج بھی جموں وکشمیرکے عوام کیساتھ ہورہی ناانصافیوں کیخلاف برسرجہد ہے اور ہماری جماعت کسی بھی صورت میں اپنے اصولوں سے انحراف کرنے والی نہیں۔ نیشنل کانفرنس کو جہاں جموں و کشمیر کی واحد اور حقیقی عوامی نمائندہ جماعت ہونے کا طرہ امتیاز حاصل رہاہے وہیں اس جماعت نے بھی ہمیشہ لوگوںکو ہی طاقت کا سرچشمہ سمجھا ہے اور یہ جماعت آج بھی اسی اصول پر قائم و دائم ہے۔ ان باتوں کا اظہار صدرِ نیشنل کانفرنس ڈاکٹر فاروق عبداللہ نے آج جموں میں کٹرا، سانبہ، نگروٹہ اور دیگر علاقوں سے آئے ہوئے مختلف طبقہ ہائے فکر سے تعلق رکھنے والے عوامی وفود، کیساتھ تبادلہ خیالات کرتے ہوئے کیا۔ اس موقعے پر پارٹی کے صدرِ صوبہ جموں ایڈوکیٹ رتن لعل گپتا اور صدرِ صوبہ یوتھ ونگ اعجاز جان اور دیگر عہدیداران بھی موجود تھے۔ وفود نے ڈاکٹر فاروق عبداللہ کو اپنے اپنے علاقوں کے لوگوں کے مسائل و مشکلات کے علاوہ حدبندی کمیشن کی مجوزہ رپورٹ سے متعلق اپنے تحفظات سے آگاہ کیا۔ ڈاکٹر فاروق عبداللہ نے موقعے پر لوگوں کے مسائل متعلقہ حکام کیساتھ اُٹھا کر ان کا سدباب کرانے کی تاکید کی۔ حدبندی کمیشن کی رپورٹ کو ایک بار پھر مسترد کرتے ہوئے صدرِ نیشنل کانفرنس نے کہاکہ کمیشن کی رپورٹ ناانصافی پر مبنی ہے، جس کا مقصد جموں وکشمیرکے عوام کو علاقائی، لسانی اور مذہبی بنیادوں پر تقسیم کرکے بھاجپا کو انتخابات میں فائدہ پہنچانا ہے۔ اُن کا کہنا تھاکہ نیشنل کانفرنس کے تینوں ایسوسی ایٹ ممبران نے کمیشن میں اپنا جواب داخل کردیاہے اور ایسی کسی بھی مشق سے گریز کرنے کیلئے کہا گیا ہے۔ ہمارا مانناہے کہ جس قانون کے تحت اس حدبندی کمیشن کا قیام عمل میں لایا گیاہے اُس قانون کی جوازیت سپریم کورٹ میں زیر سماعت ہے اور اس مشکوک قانون کے تحت جموںوکشمیر کی حدبندی کرنا سپریم کورٹ کی توہین کے مترادف ہے۔ انہوںنے کہا کہ نشستوں کی حدبندی آبادی کے تناسب سے ہونی چاہئے لیکن یہاں من مانے طریقے سے نشستوں کی حدبندی کی گئی ہے اور کئی تاریخی اہمیت کی حامل نشستوں کا نام و نشان ہی ختم کردیا ہے ۔ڈاکٹر فاروق عبداللہ نے کہاکہ بھاجپا کے ان مذموم منصوبوں کا مقابلہ صرف اور صرف ہوشیاری اور متحد ہوکر کیا جاسکتا ہے اور وقت کا تقاضا ہمیں عملی طو رپر اتحاد و اتفاق میں رہیں اور جموں و کشمیر کیخلاف ہورہی ہر ایک سازش کا ڈٹ کر مقابلہ کریں۔

متعلقہ خبریں

صدرِ جموں وکشمیر نیشنل کانفرنس و رکن پارلیمان ڈاکٹر فاروق عبد للہ نے حضرت میرک شاہ صاحب ؒ کے سالانہ عرص مبارک باد.

کونہِ بل پانپور میں آج صبح ایک دلدوز سانحہ پیش آیا جسمیں دو افراد موت کی آغوش میں چلے گۓ۔ کونہِ بل علاقے میں کھیتوں.

جنوبی قصبہ قاضی گنڈ میں ٹرین کی ٹکر سے 50 سال کی خاتون لقمہ اجل بن گئیں فہمیدہ بانو زوجہ بشیر احمد ساکنہ پازنتھ نامی.

سرینگر کے صورہ اور اونتی پورہ کے آگہانجی پورہ علاقوں میں فوج و فورسز اور عسکریت پسندوں کے مابین مسلح تصادم آرائیوں.

سرینگر /26مئی جنوبی قصبہ اونتی پورہ کے آگہناز پورہ علاقے میں جمعرات کی شام فوج و فورسز اور عسکریت پسندوں کے مابین.